HomeSPORTSپاکستان کے یہ 2 فاسٹ بولرز کاؤنٹی کرکٹ کھیلنے کے بعد بہت...

پاکستان کے یہ 2 فاسٹ بولرز کاؤنٹی کرکٹ کھیلنے کے بعد بہت خطرناک ہو جائیں گے۔۔ عاقب جاوید


عاقب جاوید سے سوال کیا گیا کہ پاکستانی فاسٹ بولرز کے ورک لوڈ کی وجہ سے کیا انہیں کاؤنٹی کرکٹ کھیلنے کی اجازت دینی چاہیے تھی یا ان کو آرام دینا چاہیے تھا۔

اس پر انہوں نہ کہا کہ کھلاڑیوں کے ورک لوڈ میں توازن لانا پڑے گا، کھیل کے ساتھ کرکٹرز کے لیے ضرورت کے مطابق ریسٹ بھی ضروری ہے۔

شاہین آفریدی اور حارث رؤف کاؤنٹی کھیلنے کے بعد مزید خطرناک ہوجائیں گے، دونوں کی یہ خوبی ہے کہ وہ بہت تیزی سے چیزوں کو سمجھنے، سیکھنے اور ٹھیک کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔

میرے خیال میں تو اب حارث روف کو ٹیسٹ کرکٹ کے لیے بھی خود کو تیار کرنا چاہیے۔

سابق ٹیسٹ کرکٹر عاقب جاوید کا مزید کہنا ہے کہ ایک وزیر اعظم کو بورڈ کا پیٹرن انچیف نہیں ہونا چاہئے۔ ایک انٹرویو میں پاکستان کے سابق ٹیسٹ فاسٹ بالر عاقب جاوید کا کہنا ہے کہ میرا ہمیشہ یہ مؤقف رہا ہے کہ وزیرِاعظم کو کرکٹ بورڈ کا پیٹرن انچیف نہیں ہونا چاہیے، ماضی میں زیادہ تر یہ ہی دیکھنے میں آیا ہے کہ وزیرِاعظم بدلتے ہی پی سی بی کی پالیسیاں بھی بدل جاتی ہیں۔

عداقب جاوید نے کہا کہ پاکستان کرکٹ کی بہتری کے لیے حقیقت پر مبنی پالیساں بنانے کی ضرورت ہے، جس میں تسسلسل ہونا چاہیے، میرے نزدیک پاکستان کرکٹ میں ریجنز کا کردار ختم کرنا غلط پالیسی تھی، امید ہے کہ اب ان کو دوبارہ بحال کیاجائے گا۔

جونئیر لیگ کا کوئی فائدہ نظر نہیں آرہا، انڈر 19 سطح پر دو یا تین روزہ کرکٹ کھلانے کی ضرورت ہے، ایسی پلاننگ کی جائے کہ بچے سال بھر مصروف رہیں۔

The post پاکستان کے یہ 2 فاسٹ بولرز کاؤنٹی کرکٹ کھیلنے کے بعد بہت خطرناک ہو جائیں گے۔۔ عاقب جاوید appeared first on Cricketistan.



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

close